مرکزی صفحہ / اداریہ

اداریہ

صوبائی ادبی ایوارڈ: کچھ سنجیدہ سوالات

ایڈیٹر ادب ایک سنجیدہ سماجی سرگرمی ہے. یہ ایک سخت ذہنی مشقت ہے، جس کا حتمی ثمر نوعِ انسانی کو مسرت سے سرشار کرنا ہے. اسی لیے یہ ایک ذمہ دارانہ عمل بھی ہے. اسی کے پیشِ نظر دنیا بھر میں ادب تخلیق کرنے والوں کو سماج میں ایک الگ، …

Read More »

دگرگوں ملکی حالات اور سیاسی فراست کا تقاضا

ایڈیٹر گزشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران پاکستان کے سیاسی حالات میں نہایت تیزی سے جو اتار چڑھاؤ آئے ہیں ان کے پیش نظر حکومتِ وقت سمیت ملک کی سیاسی قوتوں کی ذمہ داریوں میں بھی اضافہ ہوا ہے. پاکستان کے جڑواں شہر راولپنڈی اور اسلام آباد میں کے سنگم پر …

Read More »

ادارتی نوٹ برائے مصنفین

ایڈیٹر حال حوال کا قارئین اور لکھاریوں‌ کے ساتھ ڈیڑھ سال کا رشتہ ہے. حال حوال ٹیم کی کوشش رہی ہے کہ قارئین اور لکھاریوں‌ کے درمیان ایک پل کا کردار ادا کرے. لکھاریوں‌ کی کاوش اور حال حوال کی محنت نے ڈیڑھ سال میں‌ اس ناطے کو مضبوط کرنے …

Read More »

دھماکوں سے حادثوں تک، ریاست کی عملداری کا چیلنج

ایڈیٹر غم زدہ بلوچستان پہ ہفتہ رفتہ ایک بار پھر بھاری رہا. پہلے جھل مگسی کے علاقہ گنداواہ میں واقع درگارہ فتح پور شریف میں ہونے والے خودکش حملے میں 50 سے زائد انسانوں کی ہلاکتوں کا ابھی سوئم ہی نہیں ہوا تھا کہ کوئٹہ کے قریب دشت کے علاقے …

Read More »

جسم مٹ جانے سے انسان نہیں مر جاتے!

ایڈیٹر یہ بات محض شعر نہیں، صرف شاعرانہ خیال نہیں، کوئی تعلی نہیں، دعویٰ نہیں، انسانی تاریخ اس حقیقت پہ مہرِتصدیق ثبت کرتی ہے کہ محض‌ انسانوں کا جسمانی وصال ان کا دائمی خاتمہ ثابت نہیں ہوتا. ہاں مگر وہ لوگ جو جسم سے اوپر اٹھ جاتے ہیں، جو جسمانی …

Read More »

متحدہ پشتون صوبہ کی بحث

ایڈیٹر پشتون رہنماؤں نے ایک عرصے بعد بلوچستان کے پشتون اضلاع کے علاقوں‌ پر مشتمل ایک علیحدہ صوبے کا معاملہ چھیڑا ہے، جس سے اس معاملے پر ایک نئی بحث کا آغاز ہوا ہے، سینئر بلوچ صحافی اور دانش ور لالہ صدیق بلوچ نے اپنے اخبار روزنامہ آزادی کا اداریہ …

Read More »

عید مبارک!

ایڈیٹر زندگی کبھی یک رخی نہیں ہوا کرتی. یہ کبھی خوشی، کبھی غم کے بین بین چلتی رہتی ہے. جہاں بجتی ہے شہنائی وہاں ماتم بھی ہوتے ہیں کے مصداق بسر ہوتی ہے. گو کہ جس خطے میں ہمیں زندگی کرنا پڑی، وہاں ایک عرصے سے ماتم ہی ماتم ہے، …

Read More »

ایک اور 28 اگست

ایڈیٹر بلوچستان کے نوجوان صحافی اور بی یو جے کے جنرل سیکریٹری ارشاد مستوئی اور ان کے ساتھی رپورٹر عبدالرسول اور اکاؤنٹنٹ عبدالرسول کی شہادت کو اس 28 اگست کوتین برس ہو گئے۔ ایک اور 28 اگست آ گیا۔ لیکن افسوس کی بات ہے کہ ان کے خاندان اور ورثا …

Read More »

رستہ کٹ رہا ہے کہ منزل کھو رہی ہے؟!

ایڈیٹر قیامَ پاکستان کے ستر برس مکمل ہونے کے جشن سے محض دو روز قبل کوئٹہ میں ایک بار ہونے والی دہشت گردانہ کارروائی نے ایک طرف جہاں خوشیوں کے اس رنگ میں بھنگ ڈالا، وہیں ان اداروں کی کارکردگی پہ پھر سے سوالیہ نشان بھی کھڑا کر دیا ہے …

Read More »

8 اگست سے 8 اگست تک

ایڈیٹر 26 اگست اور 28 اگست کے زخموں کی مسلسل نوحہ خوانی کافی نہ تھی کہ بلوچستان کے نصیب میں ایک 8 اگست بھی رکھ دیا گیا. سیاست و صحافت کے بعد سماجی ارتقا کے سب سے متحرک کردار وکلا کو نشانہ بنایا گیا. اور محض ایک ہی حملے میں …

Read More »