مرکزی صفحہ / ذوالفقار علی زلفی (صفحہ 10)

ذوالفقار علی زلفی

ذوالفقار علی زلفی کل وقتی سیاسی و صحافتی کارکن ہیں۔ تحریر ان کا پیشہ نہیں، شوق ہے۔ فلم نگاری اور بالخصوص ہندی فلم نگاری ان کی دلچسپی کا خاص موضوع ہے۔

Buddha in a Traffic Jam

ذوالفقار علی زلفی نکسل تحریک یا ماؤوادیوں کے حوالے سے ہندی سینما میں ہمیشہ دو مخالف فکری دھارے رہے ہیں؛ ایک نکسل تحریک کو متشدد، عوام دشمن، ترقی مخالف اور ازکارِ رفتہ نظریات کا اسیر سمجھتا ہے جب کہ دوسرا اس تحریک کو سرمایہ دارانہ نظام کا راست ردِعمل، عوام …

Read More »

”ابھی فریب نہ کھاؤ۔۔۔“

ذوالفقار علی زلفی 2007 کو پاکستان میں "عدل” کے نام سے ایک خوب صورت فلم ریلیز ہوئی. یہ فلم ہندی سینما کے ہدایت کار رمیش سپی کی معرکتہ الآرا فلم "شعلے” سے متاثر تھی بلکہ شاید اسی کو سامنے رکھ کر نقل بمطابق اصل بنائی گئی. فلموں میں عموماً تمام …

Read More »

کامریڈ بھگت سنگھ اور ہندی سینما

ذوالفقار علی زلفی کامریڈ بھگت سنگھ ان چند سیاسی رہنماؤں میں سے ایک ہیں جن کی انقلابی زندگی، نظریات اور شہادت ہندی سینما کی دلچسپی کا مرکز رہے ہیں. گوکہ ان کی زندگی پر دیگر زبانوں تامل، ملیالم اور بنگالی وغیرہ میں بھی فلمیں بنائی گئی ہیں مگر چونکہ زیر …

Read More »

ڈاکٹر حنیف شریف کی فلم’ کریم‘: ایک جائزہ

ذوالفقار علی زلفی ڈاکٹر حنیف شریف بلوچی سینما کے ان چند ہدایت کاروں میں سے ایک ہیں جو فلمی تکنیک کو نہ صرف خوب سمجھتے ہیں بلکہ اس کے استعمال سے بھی کماحقہُ واقف ہیں. انہوں نے میری معلومات کے مطابق تاحال چار فلموں کی ہدایت دی ہے: "بالاچ” ، …

Read More »

نہ تھکنے، نہ جھکنے نہ رکنے والا انتھک سپاہی

ذوالفقار علی زلفی وہ چلا گیا , اپنے پیچھے ان گنت یادیں اور ان یادوں کی خوشبوئیں فضاؤں میں بکھیر کر……نصف صدی سے زائد عرصے تک وہ ادب اور سیاست کو ایک درست سمت دینے میں جتے رہے….نہ تھکے , نہ رکے اور نہ ہی جھکے…… 2004 کی خنک صبح …

Read More »

PARCHED اور بلوچ روایات

ذوالفقار علی زلفی فلم PARCHED پہ میرا تبصرہ شایع ہونے کے بعد ایک صاحب نے مجھے غصیلا میسج کیا کہ فلم میں رادھیکا آپٹے کسی غیر مرد سے بچہ پیدا کرتی ہے اور تم کہتے ہو یہ فلم بلوچستان کا معاشرہ ہے…..تم جیسے "بے غیرت بلوچ” روایات کا مذاق اڑا …

Read More »

عورت دوست ہندی فلم PARCHED: صرف "فکری” بالغان کے لیے

ذوالفقار علی زلفی "مرد بننا چھوڑ پہلے انسان بننا سیکھ لے”….. وہ تین عورتیں ہیں: طوائف، بیوہ اور بے اولاد . زندگی مختلف، مگر درد مشترک، مردوں کے سماج میں زندہ رہنے کی کوششیں یکساں…..سچ تو یہ ہے یہ ہمارے سماجی نظام کی ہر غلام عورت کی کہانی ہے. راجھستان …

Read More »

بلوچی زبان پر حملہ: ”پہاڑوں کو جلایا نہیں جا سکتا!“

ذوالفقار علی زلفی اخباری اطلاعات کے مطابق فوج کے ذیلی ادارے ایف سی نے چھ ستمبر 1965 کی جنگ کی یاد تازہ کرنے اور فتوحات کا سلسلہ برقرار رکھنے کے لیے بلوچستان کے شہر تربت پر چڑھائی کرکے پاکستان کو ایک بار پھر بچالیا…..یہ کامیاب آپریشن کتابوں کی دوکان "پاک …

Read More »

پاکستان زندہ باد!

ذوالفقار علی زلفی پاکستان میں وقتاً فوقتاً منفرد نعروں کی تخلیق ہوتی رہتی ہے جنہیں سننے کے بعد سمجھنے کی ضرورت نہیں رہتی…ماضی بعید میں "پاکستان کا مطلب کیا، لاالہ الا اللہ ” یا "کشمیر بنے گا پاکستان” سمیت ماضی قریب میں ایک نعرہ کافی مقبول ہوا؛ "سب سے پہلے …

Read More »

اتنا سناٹا کیوں ہے بھائی!

ذوالفقار علی زلفی وہ کتابیں چھاپتے تھے ،ادبی تقریبات کا انعقاد کرتے تھے، تقریباً ہر ادبی تقریب میں اپنی شرکت یقینی بناتے تھے۔وہ ایک انوکھی ’حوالہ جاتی لائبریری‘ کی بنیاد رکھنے والوں میں شامل تھے۔تین دہائیاں گزرگئیں ۔ نہ ستائش کی تمنا نہ صلے کی پرواہ، بس سر جھکائے یہ …

Read More »