مرکزی صفحہ / سکندر مگسی

سکندر مگسی

سکندر مگسی
سکندر علی مگسی ایک سماجی کارکن ہیں۔ بلوچستان یونیورسٹی کے شعبہ ابلاغ عامہ سے ایم اے کر چکے ہیں۔ سماجی سرگرمیوں کے ساتھ ساتھ صحافتی سرگرمیاں بھی انجام دیتے ہیں۔ Sikandar_magsi786@yahoo.com

جھل مگسی میں بلوچستان رورل سپورٹ پروگرام کی سرگرمیاں

سکندر علی مگسی بلوچستان رورل سپورٹ پروگرام کے زیر اہتمام ضلع جھل مگسی میں بلوچستان رورل ڈویلپمنٹ کمیونٹی ایمپاورمنٹ پروگرام (BRDCEP) جاری ہے۔ جس کے تحت غربت سروے کا کام مکمل ہو چکا ہے۔ اس سروے سے نہ صرف غربت بلکہ پینے کا صاف پانی، تعلیم، صحت، روزگار، معذور افراد …

Read More »

بے یار و مدد گار وزدانی قبیلہ

سکندر مگسی بلوچستان کا ضلع جھل مگسی کو درپیش مسائل و مشکلات کا سامنا ہے ان میں سے ایک پانی نہ ہونا. جس کی وجہ سے لاکھوں ایکڑ اراضی زمینیں غیرآباد ہیں. یونین کونسل ہتھیاری جھل مگسی سٹی سے 20 کلومیٹر اور ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر گنداواہ سے لگ بھگ 30 …

Read More »

کمیونٹی سکول گوٹھ آدم خان مگسی کی روداد

سکندر علی مگسی 15 اگست 2008ء میں بلوچستان ایجوکیشن فاؤنڈیشن  کی طرف سے گوٹھ آدم خان مگسی میں اسکول کی منظوری ہوئی اور بلوچستان ایجوکیشن فاؤنڈیشن کی طرف سے ایک ٹیچر منتخب ہوا چلتا چلتا سکول کی اچھی کارکردگی کی وجہ سے بلوچستان ایجوکیشن فاؤنڈیشن والوں نے ٹیچر اور کمیونٹی …

Read More »

اختر جان مینگل: بلوچستان کی آخری امید

سکندر علی مگسی صوبہ بلوچستان جو ایک طرف معدنی دولت سے مالا مال ہے، وہیں دوسری طرف اپنے باسیوں کی حالت زار پر بھی نوحہ کناں ہے۔ تعلیمی، سیاسی اور معاشرتی لحاظ سے انتہائی دگرگوں حالت کا شکار ہے۔ اس پسماندہ علاقے کی ترقی کے تمام سیاسی رہنماؤں نے صرف …

Read More »

جھل مگسی میں سیاحت کے فروغ کی ضرورت

سکندر علی مگسی پاکستان کا شمار دنیا کے اْن خوش قسمت ممالک میں ہوتا ہے جس کو اﷲ تعالیٰ نے بہت سی قدرتی نعمتوں سے نواز رکھا ہے۔ کسی بھی ملک کی اہمیت کا اندازہ اْس کی جغرافیائی اہمیت سے لگایا جا سکتا ہے۔ ہمارے ملک پاکستان کو بھی اﷲ …

Read More »

پاکستان میں میڈیا کا کردار اور نوجوان نسل

سکندر علی مگسی موجودہ تیز رفتار ترقی کے دور میں انسانی زندگی پر سب سے زیادہ اثر انداز ہونے والا عنصر میڈیا ہے۔ میڈیا نئی نسل میں وژن، سوچ، عمل پیدا کر رہا ہے۔ میڈیا کی بدولت کلچر فروغ پا رہا ہے۔ ٹرینڈ تبدیل ہو رہے ہیں۔ آگاہی و شعور …

Read More »