مرکزی صفحہ / شبیر رخشانی

شبیر رخشانی

شبیر رخشانی
آواران کا یہ نوجوان کل وقتی صحافی ہو کر بھی حرف کی حرمت سے نہ صرف آگاہ ہے بلکہ اسے برتنا بھی جانتا ہے۔ شبیر رخشانی اِن دنوں "حال حوال" کا کرتا دھرتا بھی ہے۔ rakhshanibaloch@gmail.com https://web.facebook.com/shabir.rakhshani

ڈیرہ بگٹی کے بیروزگار انجینیئرز

شبیر رخشانی ہم آئے روز چیختے چلاتے ہیں، ناانصافیوں کے خلاف آواز اٹھاتے ہیں، لکھتے ہیں۔ پر کسی کے کانوں کو جو تک رینگتی نہیں۔ خبریں آ رہی ہیں کہ ہنگول نیشنل پارک کا ایک بڑا ایریا نجی کمپنی سپارکو کے حوالے کر دیا گیا ہے۔ سپارکو انرجی پلانٹ لگا …

Read More »

دشمن کے بچوں کو پڑھانے والے، اک نظر اِدھر بھی!

شبیر رخشانی میں روز جہاں سے گزرتا ہوں اس گزرگاہ پر ایک ہی گھر کے پانچ بچے کھیلتے ہوئے نظر آتے ہیں۔ یہ کھیل کود ان کے روز کا معمول ہے۔ یہ بچے مجھے اس جہاں کے نہیں لگتے، یہ بلوچستان کے باسی ہیں۔ حالات نے انہیں کراچی کا راستہ …

Read More »

’’لیاری کی ادھوری کہانی‘‘ کے خالق رمضان بلوچ سے مکالمہ (1)

مکالمہ: شبیر رخشانی عکاسی: بشیر ساجدی مصف خود ایک کتاب ہے۔ مصنف نے اپنے اندر کا خاکہ کتابی شکل میں شائع کیا۔ کتاب ایک سال سے الماری کی زیب و زینت بنی رہی۔ تب خیال آیا، پڑھا۔ پڑھ کر خیال آیا ہم نے بہت دیر کر دی۔ کتاب لیاری کی …

Read More »

’’لیاری کی ادھوری کہانی‘‘ کے خالق رمضان بلوچ سے مکالمہ (2)

مکالمہ: شبیر رخشانی عکاسی: بشیر ساجدی س: تو آپ کیا سمجھتے ہیں کہ لیاری میں پیپلزپارٹی کو مقام دلانے میں اینٹی سردار گروپ کا ہاتھ تھا؟ ج؛ کسی حد تک۔۔اسٹوڈنٹس طبقے میں۔۔ ویسے تو ایک عوامی ریلا تھا۔ ایک سیلاب تھا۔ اس میں تو سب بہہ گئے۔ پورے پاکستان میں …

Read More »

بلوچستان میں‌ شورش کے اصل محرکات کیا ہیں؟

شبیر رخشانی میری نظریں جب بھی گاؤں کے واحد کنویں پر پڑتی تھیں تو وہاں خواتین کا جم غفیر ہی نظر آتا تھا. 60 فٹ گہرے کنویں‌ سے پانی نکالتی ہوئی یہ خواتین اکیسویں‌ صدی کی انسان لگتی ہی نہیں تھیں. پر وہ اکیسویں‌ صدی میں‌ ہی جی رہی تھیں. …

Read More »

جب ہم نے پہلی بار ٹی وی دیکھی

شبیر رخشانی ویسے تو یہ روز مرہ کا مشاہدہ ہوا کرتا تھا کہ کون کیا کرتا ہے دن کو کہا ں جاتا ہے کب لوٹ آتا ہے۔ یہ ساری چیزیں تصویر کی صورت میں زہن میں نقش کرجاتی تھیں۔ پھر وہ نقل و حرکت ساکت پائے گئے۔ فوٹوز کہلائے۔ 36فلمز …

Read More »

عبداللہ جان جمالدینی کی شمعِ فروزاں

شبیر رخشانی عبداللہ جان جمالدینی چلے گئے۔ ابدی نیند سو گئے، پر جانے سے قبل انہوں نے کئی نیک کام کیے۔ یہی وجہ ہے کہ ان کے جانے کا گمان ہی نہیں ہوتا۔ کئی کتابیں تصنیف کیں، یاداشتیں لکھیں۔ وارثت میں‌ جائیداد کے بجائے ایک نسل چھوڑی جو اس کے …

Read More »

گوادر میں پانی کا بحران، وہاں‌ کی صحافی برادری کیا کہتی ہے؟

شبیر رخشانی گوادر، سمندر کے دامن میں‌ واقع ہونے کے باوجود نہ خود کو سیراب کرا سکا اور نہ ہی اپنے باسیوں‌ کو. گوادر میں‌ پانی کا بحران ہروقت سر اٹھاتا رہا ہے. گوادر میں‌ واٹر پلانٹ لگائے گئے. ڈیم بنائے گئے. طرح‌ طرح‌ کے منصوبے بنائے گئے. سی پیک …

Read More »

بلوچستان: اندیشے اور امکانات

شبیر رخشانی سوشل میڈیا اور میڈیا پر تو بلوچستان سے متعلق ہنگامہ سا برپا ہے۔ کئی دنوں سے سوچ رہا تھا کہ ہنگامی صورتحال تھم جائے تو حال دل سنایا جائے۔ پر شور و غل کی کیفیت اتنی طاری ہو چکی تھی کہ تھمنے کا نام ہی نہیں لے رہی …

Read More »