مرکزی صفحہ / کے بی فراق

کے بی فراق

کے بی فراق
کے بی فراق بلوچی زبان و ادب کے کل وقتی کارکن ہیں۔ بلوچستان کے ساحلی شہر گوادر میں بیٹھ کر علم اور ادب کا پرچم سربلند رکھا ہوا ہے۔ بلوچ سماج کی سیاسیات و سماجیات پہ بھی ان کی نظر رہتی ہے۔

گوادر: جیوز کے زیراہتمام ادبی پروگرام کا احوال

رپورٹ: کے بی فراق جیوز نے نوجوانوں کی علمی و ادبی تربیت کے سلسلے میں جس طرح اپنی تسلسل کو برقرار رکھا وہ دیکھنے لائق ہے۔ اس سلسلے میں یکم اگست کو ایک بصیرت افروز علمی و ادبی مجلس کا انعقاد جیوز کے ایک اہم فکر پرور رُکن ،اور حال …

Read More »

کاغذ کے راون اور قلم کے سپاہی: ایک خودکلامی

کے بی فراق مہروانیں واجہ محمد عامر حسینی! درھبات! یہ نمدی تو نہیں ایک اذیت نامہ ہے۔ جانے کون نگری میں سانسیں کھینچ رہا ہوں کہ اپنے محب کی اور دھیان کچھ اس طور لگا کہ خونچکاں لہریے دُروشم منور ہوئے۔ پتہ ہے ہم نے واقعات کو ادب کا حصہ …

Read More »

حال حوال — کے بی فراق

کے بی فراق حال حوال نے بلوچستان میں ویب نیوز پیپر کی اشاعت کے سلسلے میں اپنا ایک منفرد و فکر پرور مقام بنایا، جس میں فکر و نظر کی بنیاد لیے خاصے اہم مضامین سے مکالمے کا سلسلہ در آتا ہے۔ جس میں بلوچستان کو بولتا ہوا دکھایا گیا …

Read More »

جیوز ریفرنس لائبریری گوادر، فکر سے تخلیق کا سفر

کے بی فراق ایک بار سینٹیر اسحاق لائبریری آر سی ڈی سی گوادر سے مجھے یوں نکال دیا گیا کہ جی جانتا ہے۔ اس بابت کبھی سوچتا ہوں تو مجھے عبرت کے سوا کوئی اور لفظ سوجھتا نہیں۔ بہت پہلے کی بات ہے جب اس خاکسار نے جیوز ریفرنس لائبریری …

Read More »

عدم برداشت، تنگ نظری اور جبر پر قائم معاشرہ

کے بی فراق پورا شہر اس وسیع میدان میں اُمڈ آیا تھا اور اس پر موت کا سکتہ طاری تھا۔اچانک ایک سے کھسرپھسر کی آوازیں آنا شروع ہوئیں تو سارا ہجوم اس طرف متوجہ ہوا۔ وہاں ایک بزرگ تھا، جس کی داڑھی سفید تھی، چال میں بلا کی متانت تھی …

Read More »

حصولِ تعلیم، غلط ترجیحات اور سماجی بے گانگی

کے بی فراق مَیں اپنے گردونواح میں ایک ایسے کیریریسٹ کردار کو تعلیمی اداروں میں پڑھتے، بڑھتے اور پھلتے ہوئے دیکھ رہا ہوں جس نے تعلیمی اداروں میں اپنی کیریر کو بنانے کے علاوہ کچھ بھی حاصل نہیں کیا اور اس سلسلے میں ان کے لیے اپنے گلی محلے سے …

Read More »

گوادر کے دکھوں پر چند ’’ہم – دردوں‘‘ کا مکالمہ

کے بی فراق گوادر میں کچھ شور تھم ساگیا تو چند ایک مہروان احباب میسر آئے۔ تو سوچا کہ کیوں نہ اِس دِن کو مکالمے کی صورت منور کریں۔ بھلا ہو میرے اِن مہروان دوستوں ڈاکٹر عظمیٰ بلوچ، محراب گچکی، عمران ثاقب، پروین ناز، سیف جان، عزت محراب، نودان محراب …

Read More »

ادبی تنقید اور قبائلی رویے

کے بی فراق ہم جب بھی کبھی بلوچستان کے ادب پر بات کرنے لگتے ہیں تو اس بیچ ہمارا سامنا قبائلی مزاج، برتاؤ اور رویوں سے بھی ہوتا ہے کیوں کہ یہاں کے بیشتر لیکھک میں بہت کچھ ہونے کے باوجود بھی وہی ایک محرک، عدم برداشت کی صورت جیسے …

Read More »

گوادر میں عبداللہ جان جمالدینی یات گیری مراگش کا احوال

رپورٹ: کے بی فراق جیوز نے گوادر بلوچستان میں ایک برتر ادبی مکالمے کو دانش ورانہ روایت و درایت کے عمل سے گزار کر انسانیت آموز جہت عطا کرنے میں نہایت کمٹ منٹ کے ساتھ زندگی آموز کرداری صورت میں منقلب کیا ہے، جس کے اثرات آنے والے برسوں میں …

Read More »