مرکزی صفحہ / جاوید بلوچ

جاوید بلوچ

جاوید بلوچ
نوجوان طالب علم جاوید بلوچ کا تعلق گوادر سے ہے۔ سماجی معاملات پہ لکھنا ان کا شوق ہے۔ Email: bjaved739@gmail.com

اعتزاز کی شہادت اور عمران کی شادی‎

جاوید بلوچ گزشتہ روز چھ جنوری کو میں سمجھتا ہوں اس ملک کی تاریخ میں کچھ اس لیے اہم تھا کہ یہاں دفاع ، تحفظ اور سیکیورٹی کیلے جو ادارے قائم ہیں وہ خود کتنا محفوظ ہیں؟ ان کے تربیتی مراکز کی سیکورٹی کیسی ہے؟ اور دفاع کا عالم کیا …

Read More »

"راجے کہ بہ بیت گنگ…”

جاوید بلوچ راجے کہ بہ بیت گُنگ نہ مانیت نہ مانیت مانیت پہ ادارُکی بزاں زندگءَ مُردار نزاناں واجہ سید ھاشمیءِ ھیالاں چی اتکگ کہ آئیءَ اے تژن، سوج ءُ بزگیءِ درانگازی کُرتگ بلے سماء بیت کہ آئیءَ ھمیں وڑیں جاور دیستگ انت کہ انو بلوچستان دو ہزار ہبدہءَ دیمپان …

Read More »

میں روزنامہ ہوں پر روزانہ نہیں‎

جاوید بلوچ میں کون ہوں؟ مجھے کس نے زندگی بخشی اور کیوں بخشی؟ اور میں نے خود کو کتنا جانا؟ کتنا زندہ رکھا اور کتنا زندہ ہوں؟ یہ سوالات میرے موٹے حروف، اُن میں چھپے دعوے اور شہرت کے رنگین (مگر کسی بیوہ کی پوشاک جیسی) الفاظ مجھ سے روز …

Read More »

گوادر شاہی بازار کا ابراہیم پان ہاؤس

جاویدحیات برِصغیر کی تاریخ میں پان کو راجاؤں اور نوابوں کی مجالس میں بڑے ذوق سے استعمال کیا جاتا رہا ہے۔ دربارمیں پَرجا کے بعد اگر کوئی اور بات ہوتی تووہ پان کھانے کے بعد بیان کی جاتی۔ دیوان خانے میں پان کھانے والے پان دان کی طرح چمکتے رہتے۔ …

Read More »

قائداعظم یونیورسٹی میں رواداری نے مار کھائی

جاوید بلوچ تعلیمی اداروں میں کسی ملک اور قوم کے معمار نکلتے ہیں. یہ وہ جگہیں ہیں جہاں نوجوان آگے چل کر اس لعنت کو مٹانے کی کوشش کرتے ہیں جسے کہیں پسماندگی تو کہیں جالت اور کہیں نہ جانے کس نام سے یاد کیا جاتا ہے اور خاص کر …

Read More »

حال حوال — جاوید بلوچ‎

جاوید بلوچ "حال حوال اور سفر صحافت” کی جگہ شاید مجھے لکھنا یہ چاہیے تھا کہ سفرِ صحافت حال حوال تک، مگر میری کمزور گرائمر میں "تک” کے لفظ میں ایک قسم کا اختتام نما سا ذائقہ محسوس ہو رہا ہے اور ویسے بھی نہ تو سفر صحافت کبھی رکتا …

Read More »

کڑکتے قہقہے

جاوید بلوچ وزیر اعلیٰ پنجاب عزت ماب شہباز شریف اپنے ترقیاتی کاموں اور ترقی یافتہ صوبے کی وجہ سے ہم پسماندہ صوبے کے باشندوں کے لیے پہلے سے "اسم نکرہ” کی انتہا پر تھے. کبھی میٹرو بسوں کے شور کی کڑک تو کبھی پڑھے لکھے پنجاب کے نعروں کی کڑک …

Read More »