مرکزی صفحہ / براہوئی / گڑاس انشائیہ

گڑاس انشائیہ

نوشتہ : غمخوارحیات
کنا دنیا

ای اودے بھاز زاری منت کریٹ کہ کنا دنیا ٹی بہ۔۔۔۔۔۔
او سوج کرے کہ دنیا کل اسٹءِ ناوا امر ءُ جتا ءُ دنیا سے؟
ای پاریٹ کنا دنیا ٹی جنگ اف، خون و پھسات اف۔
فرقہ پرستی، زبان پرستی (لسانی منافرت) فرقہ واریت و تخریب کاری اف۔۔۔
کنا دنیا ٹی انتشار ، استحصال اف۔۔۔
کنا دنیا ٹی مذہبی جنونیت اف قوم آتا بنیات آ انتہاء پسندی اف۔۔۔
کنادنیا ٹی ظلم اف کہ مظلوم نا حق آتے کُنے ۔۔۔۔۔۔
اؤ۔۔۔ کنا دنیاٹی ظلم اف انصاف ارے ۔۔۔
کنا دنیا ٹی دروغ اف گواچنی نا روشنائی ءِ ۔۔۔
کنا دنیا ٹی اَنا پرستی اف، پن شہرت نمود و نمائش کن جنگ و زنچک ارّنگ نا شرّی اف۔۔۔
کنا دنیابندغ نا شرپسندی آن دتر چُر اف بلکن کنا دنیا ٹی امن و آشتی نا باغ و گلشنک آباد ءُ۔۔۔
کس ءِ کس آن خلیس اف داخاطر کہ کنا دنیا ٹی کس منافقت کپک ۔۔۔
کنا دنیا ٹی ظاہر پرستی اف بلکن باطن پرستی ءِ ۔۔۔
کنا دنیا ٹی پن قبیلہ ، میری ، سڑداری آخا بلکن کڑد و کڑدار نا بادشاہی ءِ ۔۔۔
کنا دنیا ٹی بیرہ انسانیت و آفاقیت ناعقیدہ ءِ۔۔۔
داکل ءِ بننگ آن پد او پارے نا دنیا تو جوان ءِ ولے ۔۔۔۔۔۔ ای نادنیا ٹی بننگ کپرہ کنا گڑاس مجبوری ءُ ۔۔۔
ای اونا مجبوری ءِ پہہ مسُٹ ۔۔۔
اؤ۔۔۔’’ اوداسکان تینا ذات آن پیشن مننگ کتویسس‘‘

****
راسکوہ

مون نا ہتم نا دے تیٹ ای و کنا شاعرسنگت اس راسکوہ نا دامن آ۔۔۔
گواڑخ بننگ کِن ہنان ۔۔۔۔۔۔
راسکوہ ننے خنا توسوج کرے ورناک انت کننگ اُرے ۔۔۔۔۔۔؟
پارین گواڑخ پٹنہ تینا محبوبہ تیکن ٹیکی دینہ۔۔۔۔۔۔
راسکوہ مخسا پارے نم شاعر آک امر ءُ گنوک اُرے کہ پوغ وہس تیٹی ہم پھل و گواڑخ پٹرے!!!

****
ہمسایہ

منہ دے مست ای تینا ہمسایہ غان پدین ءُ سیخا اس خواہسُٹ
شکری آ ہمسایہ کنا جند انا دیوالءِ بٹے۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔!!!
****
بندغی

اسہ دے سیاہ کو نا خل تیان اینگ اسہ بدحال ۔۔۔۔۔۔۔۔۔اَگڑی پوش۔۔۔۔۔۔۔۔۔ نت شپاد ۔۔۔۔۔۔۔۔۔سردرا۔۔۔۔۔۔۔۔۔ پتڑو آنک ۔۔۔۔۔۔۔۔۔بارن آ جوڑ تتون۔۔۔۔۔۔ ملاس و بینگن باپِست خلوک ءُ بندغ اس خناٹ۔۔۔۔۔۔۔۔۔
اوڑان ارّفیٹ نی دیر اُس۔۔۔۔۔۔۔۔۔؟
نا حال انتئے دن ءِ۔۔۔۔۔۔۔۔۔؟
پارے ای بندغی(انسانیت) اُٹ کنے نما شار انا بندغ آک دا حال آ سر کرینو۔

****
ایلم۔۔۔۔۔۔۔۔۔

استو خلق اٹ بے وس اسینا مار خلنگا داکا ایکا مخلوق ۔۔۔۔۔۔سیال و قریب آک ۔۔۔۔۔۔۔۔۔
بزرگ ومعتبر۔۔۔۔۔۔
سرکاری کارندہ غان ارّفیر اوڑان کہ نیتو کس انا دشمنی یا تنازعہ اس ارے۔۔۔۔۔۔۔۔۔ ؟
پارے دشمن تو اف کنے بہرحال ایلم ارے کنے!
****

Facebook Comments
(Visited 13 times, 1 visits today)

متعلق غمخوار حیات

غمخوار حیات
غمخوار حیات بنیادی طور پر براہوی کے ادیب اور شاعر ہیں۔ تعلق نوشکی سے ہے۔ ان دنوں نوشکی ہی کے کالج میں براہوی ادب پڑھاتے ہیں۔ درجن بھر کتابوں کے مصنف ہیں۔