مرکزی صفحہ / سیاسی حال / کوئٹہ: تحریکِ عدم اعتماد، جوڑ توڑ عروج پر، وزیراعظم کی آمد، آج اہم فیصلے متوقع

کوئٹہ: تحریکِ عدم اعتماد، جوڑ توڑ عروج پر، وزیراعظم کی آمد، آج اہم فیصلے متوقع

نیوز ڈیسک

بلوچستان اسمبلی میں وزیراعلیٰ ثنااللہ زہری کے خلاف تحریک عدم اعتماد جمع ہونے کے بعد سیاسی ماحول کی گرما گرمی میں تیزی دیکھی جا رہی ہے. جوڑتوڑ کے معاملات عروج پر ہیں. ن لیگ حکومت بچانے میں اور اپوزیشن اراکین اپنے ممبر بڑھانے میں مصروف ہیں.

میڈیا اطلاعات کے مطابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی آج کوئٹہ پہنچ رہے ہیں. جہاں حالات کا جائزہ لینے کے بعد حتمی فیصلہ کیا جائے گا. میڈیا میں گو کہ ثنااللہ زہری کے ذرائع استعفیٰ کی خبروں کو رد کر رہے ہیں مگر بعض اندرونی ذرائع سے اب بھی یہ خبریں گردش کر رہی ہیں‌ کہ ذاتی طور پر وزیراعلیٰ نے مستعفی ہونے کا فیصلہ کر لیا ہے اور وہ آج وزیراعظم کو بھی اپنے اس فیصلے سے آگاہی دیں گے. ان ذرائع کے مطابق وزیراعلیٰ کی جانب سے استعفیٰ کا اعلان آج کسی بھی ہو سکتا ہے.

دوسری جانب اپوزیشن ارکان کا دعویٰ ہے کہ انہیں اس وقت تحریک عدم اعتماد کے لیے 40 اراکین کی حمایت حاصل ہے جب کہ بعض مزید اراکین بھی رابطے میں ہیں. ان کا کہنا ہے کہ عدم اعتماد ایک جہوری حق ہے جس کے تحت ان ہاؤس تبدیلی کی جائے گی، حکومتی امور پر اس سے کوئی فرق نہیں پڑے گا.

جب کہ اس سارے معاملے میں جمعیت علمائے اسلام کا کردار اہمیت اختیار کر گیا ہے. سیاسی تبصرہ نگار یہ اندازہ لگا رہے ہیں کہ اب جمعیت کا فیصلہ ہی صوبائی حکومت کا مستقبل طے کرے گا. میڈیا اطلاعات کے مطابق جمعیت نے حکومتی حمایت کے نتیجے میں صوبائی گورنرشپ سمیت 4 اہم وزارتوں کا مطالبہ کیا ہے. حکومت نے ان کے تمام مطالبات تسلیم کرنے کا عندیہ دے دیا ہے.

وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کی آج کوئٹہ آمد کے موقع پر یہ تمام معاملات طے پائیں گے اور اس کے بعد ہی کسی حتمی فیصلے کا اعلان کیا جائے گا.

Facebook Comments
(Visited 20 times, 1 visits today)

متعلق نیوزڈیسک

نیوزڈیسک
حال حوال بلوچستان سے متعلق خبروں، تبصروں اور تجزیوں پہ مبنی اولین آن لائن اردو جریدہ ہے۔ نیوز ڈیسک سے شائع ہونے والی خبریں مختلف ذرائع سے حاصل کی جاتی ہیں، جن کی مکمل ذمہ داری ادارہ پہ عائد نہیں ہوتی۔