مرکزی صفحہ / بلاگ / گوادر کی خودکلامی

گوادر کی خودکلامی

عبدالحلیم

میں نیلگوں سمندر میں گھرا ہوا ایک شہر ہوں۔ جنوب میں کوہِ باتیل کی بلند چوٹی میری شان ہے اور شمال میں کوہِ مہدی نو وارد مسافر کو میرے حسین وجود کا نظارہ کرنے سے قبل اس کا خوش گوار احساس دلاتا ہے۔

دیمی زر اور پدی زر کے جھلکتے پانیوں کی بدولت ایک ایسی دوشیزہ کا روپ دھارے ہوئے ہوں، جس کو دیکھنے کی تمنا ہر ایک کو ہے۔ ہاں ایک ایسی دوشیزہ جس کے حسن و جمال کی شہرت کوسوں دور تک پھیلی ہوئی ہے۔

گرم پانیوں کی دوشیزہ جس کی چاہ نے پُرتگیزیوں کو بھی میری طرف متوجہ کیا۔ فخر ہے کہ اپنی جنم بھومی کو بچانے کے لیے بہادر مگر گھبرو نوجوان میر حمل کلمتی نے بیرونی حملہ آوروں کو للکارا۔

پھر ایک زمانہ آیا جب گوروں نے گرم پانیوں کی اہمیت کو جان کر اپنی للچائی نظروں کو یہاں مرکوز کیا، پر وہ نظروں کی خواہش کی تکمیل نہ کر سکے۔

زمانے تبدیل ہوتے گئے لیکن میری اہمیت مسلمہ رہی۔ ایک ایسی دوشیزہ جو بناوٹ اور سنگھار کے اعتبار سے بھی تکمیل شدہ ہے۔

اب نئے بیانیے کی شور میں ماتھے کا جھومر بھی کہلاتا ہوں۔
ایک ایسا جھومر جو پینا فلکس اور بل بورڈز میں مانندِ آفتاب چمک بھی رہا ہوں۔

میں کہاں تخلیاتی دنیا میں گم ہوگیا۔ گم کیسے نہ ہوتا کمبخت یہ دنیا بھی دلفریبی کے مہا جال میں جکڑی ہوئی ہے، جس سے نکل پانا مشکل ہے اور میں بھی دلفریبی کے اس خودساختہ جکڑ میں پھنس کر اپنی خوبصورتی کا من ہی من میں دلدادہ ہوگیا۔

جب اس جکڑ سے کچھ لمحوں کی آزادی ملی تو کیا دیکھتا ہوں کہ کوہِ باتیل کے آنگن میں رواں زندگی اضطراب کا شکار ہے اور کوہِ مہدی سے پرے واقع ہجوم کی آنکھوں میں بسے خواب اب بھی تعبیر کے منتظر ہیں اور ان میں سے بہت سی آنکھیں یہ خواب دیکھ دیکھ کر پھیکے پن کا شکار بھی ہو چکی ہیں۔

ہاں ایک ایسی دوشیزہ اور ایک ایسا جھومر جس کے حسن و جمال اور چمکتے شیشوں میں نظر آنے والی رواں زندگی دو گھونٹ پانی کی متلاشی ہے۔

اچانک کسی گاڑی کا ہارن بجنا شروع ہوتا ہے تو کیا دیکھتا ہوں کہ جھومر میں جُڑے ہوئے سب نگینے ہارن کی آواز کا بوجھ برداشت نہ کر سکے اور خود بخود گرنے لگے۔ گرتے کیوں نہیں، کافور جو تھے۔

سڑکوں سے اڑتی ہوئی دھول نے میری دوشیزہ ہونے کی کہانی کو سر تا پا محرومیوں کی موٹی موٹی تحریروں سے عیاں کیا ہوا ہے، جسے کوئی بھی آسانی سے پڑھ اور سمجھ سکتا ہے۔

Facebook Comments
(Visited 21 times, 1 visits today)

متعلق عبدالحلیم

گوادر میں مقیم عبدالحلیم کل وقتی صحافی ہیں۔ مقامی مسائل کی کوریج میں دلچسپی رکھتے ہیں۔ صحافت اور ادب کے امتزاج سے کام کو ترجیح دیتے ہیں۔ Email: haleemhayatan@gmail.com