مرکزی صفحہ / اسپیشل ایڈیشن / عبداللہ جان جمالدینی / میرے بابا: عبداللہ جان جمالدینی

میرے بابا: عبداللہ جان جمالدینی

حمیرا صدف حسنی

میرے بابا، محبت کے پیمبر
تمہاری فکر میں، لفظوں میں
صدیوں کے کئی قصے
بہت سے خوب صورت خواب
دھرتی کی محبت
درد کے حصے ۔۔۔۔
تمہاری گہری آنکھوں میں
بہت گہری کئی باتیں ۔۔۔
تمہاری گفتگو میں
سوچ کے در ایسے کھلتے ہیں
کہ جیسے روشنی یوں
تیرگی کو چیر لیتی ہو ۔۔۔
میرے بابا، محبت کے پیمبر!
عجب جادوگری سی ہے
کہ کوئی ساتھ جو بیٹھا
وہ قائل ہو گیا تم سے

تمہارے حلقہِ احباب کا
وہ کارواں اب تک رواں ہے
زندگی کے آگہی کے دشت میں بابا
کہ تم ہو رہنما ۔۔۔
فکر و عمل ۔۔۔۔
علم و ہنر ۔۔۔۔ اور آگہی کے
میری دھرتی کی اس بنجر زمین پہ
فصلِ گل تم ہو ۔۔۔
کہ تم صحرا کی رونق ہو
گداں میں میرے روشن ہو
میرے جذبوں کا محور
اور میری فکر میں شامل ۔۔۔

میرے بابا، محبت کے پیمبر
میری پہچان تم سے ہے!!

Facebook Comments
(Visited 37 times, 1 visits today)

متعلق حال حوال

حال حوال
"حال حوال" بلوچستان سے متعلق خبروں، تبصروں اور تجزیوں پہ مبنی اولین آن لائن اردو جریدہ ہے۔